آپ نے ابھی تک شادی نہیں کی تو لازمی م ویڈیو کو ایک بار ضرور دیکھ لیں

آپ نے ابھی تک شادی نہیں کی تو لازمی م ویڈیو کو ایک بار ضرور دیکھ لیں

لڑکیاں نوجوان ہوتی ہے تو شوخ اور چنچل بھی ہو ہی جاتی ہیں اور پوری دنیا کی لڑکیوں میں ایسا ہوتا ہے لیکن ہر لڑکی پر اسکی تہذیب کا اثر ہوتا ہے

اور وہ اسی لہذ سے کھلتی ہے اور ہمیشہ اپنے اچھے مستقبل کی طرف دیکھتی ہے ہر لڑکی کو اپنا مستقبل اچھا بنانے کے لئے اسکو چاہیے کا ایسے گندے اور برے کاموں میں ملوث نہ ہوں اور اپنی عزت کو محفوظ رکھیں اپنے خاوند کے لئے لیکن کبھی کبھی اسکا یہ یہ شوخ اور چنچل پین اسکو تباہ و برباد کردیتا ہے ایک بار لازمی یہ ویڈیو دیکھیں اگر آپ بھی کہیں شادی شدہ نہیں ہے تو

اگر آپ نے ابھی تک شادی نہیں کی تو لازمی میری منت ہے اپ سے پلیز پلیز 2 منٹ نکال کر صرف آپ اس اہم ویڈیو کو ایک بار لازمی ضرور دیکھ لیں لڑکیاں نوجوان ہوتی ہے تو شوخ اور چنچل بھی ہو ہی جاتی ہیں اور پوری دنیا کی لڑکیوں میں ایسا ہوتا ہے لیکن ہر لڑکی پر اسکی تہذیب کا اثر ہوتا ہے

اور وہ اسی لہذ سے کھلتی ہے اور ہمیشہ اپنے اچھے مستقبل کی طرف دیکھتی ہے ہر لڑکی کو اپنا مستقبل اچھا بنانے کے لئے اسکو چاہیے کا ایسے گندے اور برے کاموں میں ملوث نہ ہوں اور اپنی عزت کو محفوظ رکھیں اپنے خاوند کے لئے لیکن کبھی کبھی اسکا یہ یہ شوخ اور چنچل پین اسکو تباہ و برباد کردیتا ہے ایک بار لازمی یہ ویڈیو دیکھیں اگر آپ بھی کہیں شادی شدہ نہیں ہے تو

میں ٹیکسی میں اکیلی بحریہ ٹائون جارہی تھی کہ اچانک ڈرائیورنے ویرانے میں گاڑی روک دی اور ٹیکسی ڈرائیورنے ویرانے میں گاڑی روک دی اور اپنے فون پر فحش فلم لگا کرکہنے لگا کہ ویڈیو دیکھیں ڈیجٹیل ٹیکسی سروس کے بے انتہا فوائد موجود ہیں مگر اس ہجوم میں کچھ کالی بھیڑیں بھی شامل ہیں جنہوں نے لوگوں کی زندگی کو مشکل بنا دیاہے ،ایسی صورتحال میں کمپینز کا کام ہے .جاری ہے .

مغربی معاشرہ شخصی آزادی اور روشن خیالی کے جنون میں اندھا دھند آگے بڑھ رہا ہے اور پھر ا ن قباحتوں کی بلندی کو چھونے کے بعد یہ معاشرہ خود کو انتہائی پستی میں گرا ہوا بھی محسوس کرتا ہے۔ ایسا ہی یورپی ملک جرمنی میں ہوا جہاں ایک ہوم ٹیوٹر اور ایک طالبہ کی شرمناک کہانی منظر عام پر آگئی۔

ایک غیر ملکی نیوز ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق جرمنی کے شہربرلن کے جنوب مغربی علاقے پوسٹ ڈیم میں مقیم ایک میاں بیوی نے اپنی بیٹی کو میوزک کی تعلیم دینے کےلئے ایک ہوم ٹیوٹر کا اہتمام کا کیا اور پھر جو ہوا اس کا انکشاف خود اس گھر کی ملازمہ نے کر دیا ۔اس خاتون ملازمہ الزبتھ کا کہنا ہے کہ 45سالہ مارک گرین وچ اور اس کی اہلیہ بلینڈا نے اپنی 19سالہ بیٹی بریتھ ویٹ کےلئے ایک مشہور میوزک ٹیچر فرینکلن کی خدمات حاصل کیں ۔فرینکلن بڑی با قاعدگی سے روزانہ بریتھ ویٹ کے کمرے میں جا کر اسے گٹار بجانے اور گلوکاری سکھانے کا کام کرتا رہا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں